سانگھڑ( رپورٹ عبدالجبار نظامانی)

محرم الحرام کے موقع پر بلدیہ اور واپڈا کی ناقص کارکردگی اور انتظامیہ کی جانب سے کئے جانے والے ناروا سلوک کے خلاف اہل تشیع سندھ کے صدر سید اسد اقبال زیدی کی پریس کانفرنس،اگر کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش آیا تو سب سے پہلے واپڈا پر ایف آئی آر درج کی جائے گی اس موقع پر ضلع صدر علامہ محمد صالح شر،ڈویژنل صدر نواب شاہ محمد حسن چانڈیو ودیگر بھی ان کے ہمراہ تھے اس موقع پر ان کا مزید کہنا تھا کہ محرم الحرام کے سلسلے میں خود پورے سندھ کا دورہ بھی کررہا ہوں اس وقت سندھ کے تمام بڑے شہروں میں بلدیہ نظام درہم برہم ہے جگہ جگہ گٹر نالیاں ابل رہی ہیں جس کی وجہ سے اہل تشیع کو سینہ کوبی اور ماتم کرنے میں دشواری پیدا ہوتی ہے اور انتظامیہ کہیں سے کوئی انتشاری بیان سن لیتی ہے تو فوری ایکشن میں آجاتی ہے اور اکثر واپڈا کو رات کی تاریکی میں لوڈشیڈنگ یاد آتی ہے اگر اس دوران پورے سندھ میں کوئی بھی ناخوشگوار واقعہ پیش آیا تو سب سے پہلے ایف آئی آر واپڈا پر درج ہوگی ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ پہلی بار حکومت نہیں کررہی اب تو اسے عادت ہو جانی چاہئے کہ سندھ حکومت کیسے چلانی ہے جب سے سندھ حکومت بنی ہے بیڑاغرق کرکے رکھ دیا ہے سندھ میں پڑھے لکھے نوجوانوں کی کمی نہیں ہے اس وقت انپڑھ سرکاری نوکری کررہے ہیں اور پڑھے لکھے نوجوان پیٹرول پمپ پر پیٹرول بھرتے نظر آتے ہیں ان کا مزید کہنا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان نے ریاست مدینہ کا نعرہ لگایا صرف نعرے لگانے سے کچھ نہیں ہوتا ریاست مدینہ کے بارے میں علم بھی ہونا چاہیے عمران خان نے اپنے تین سالہ دور حکومت میں عوام کو مہنگائی کے سوا کچھ نہیں دیا پاکستان کا بچہ بچہ فاقہ کشی پر مجبور ہیں اور ایک وقت کا کھانا نہ ہونے کی وجہ سے خود کشیوں پر مجبور ہیں عمران خان کو چاہیے کہ مہنگائی پر کنٹرول کرکے عوام کو ریلیف فراہم کرے